مبینہ آڈیو لیکس کمیشن کے خلاف درخواستوں پر سپریم کورٹ میں سماعت

مبینہ آڈیو لیکس کمیشن کے خلاف درخواستوں پرچیف جسٹس عمرعطا بندیال کی سربراہی میں 5 رکنی لارجر بینچ نے سماعت کی۔

اٹارنی جنرل عثمان منصور اعوان نے کہا کہ ہم اس بینچ پر اعتراض کررہے ہیں، چیف جسٹس عمر عطا بندیال نے کہاکہ ہمیں خوشی ہے کہ آپ اعتراض کررہے ہیں، اعتراض کرنا آپ کا حق ہے۔

چیف جسٹس نے کہا کہ جس فورم پر اس عدالت کا جج رکھا گیا وہ چیف جسٹس کی اجازت سے ہونا چا ہیے تھا،اس فورم کے لیے چیف جسٹس کو چاہیے تھا کہ وہ جج کا انتخاب کرتے، حکومت نے اپنی مرضی سے ایک جج مقرر کیا،ہمیں آئین کا احترام کرنا چاہیے، آپ نے درخواست کی ہے ہم بعد میں سنتے ہیں۔

اٹارنی جنرل عثمان منصوراعوان نے کہا کہ میرا کام تھا آپ کو آگاہ کرنا، جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ حکومت کو آگاہ کریں کہ آئین کو نظر انداز نہ کریں۔

چیف جسٹس نے کہاکہ ہم آپ کے اعتراض سے متعلق تیار تھے، حکومت کو چاہیے کہ آئین کا احترام کرے، ماضی کے کئی ایسے فیصلے موجود ہیں جس میں اس فور م کے لیے چیف جسٹس سے پوچھا جائے گا۔

Scroll to Top